Ticker

6/recent/ticker-posts

چوتھے محاذ کی شرائط و ضوابط منظر عام پر۔۔۔!

چوتھے محاذ کی شرائط و ضوابط منظر عام پر۔۔۔!


محاذ سے جڑنے والی عوام کیلئے سرِ فہرست 7 شرائط و ضوابط کی لِسٹ جاری۔۔۔!

دِسمبر میں تشکیل، جنوری 2022 سے زمینی سطح پر سرگرمیوں کی شروعات۔

عنقریب مشاورتی میٹنگ کی تاریخ، تشکیل اور شہر بھر میں کینڈیڈیٹ سیلیکشن کیلئے شرائط و ضوابط کو عوام الناس کے سامنے پیش کیا جائے گا، انشاءاللہ۔۔۔!

شہر بھر میں چوتھے محاذ سے جُڑنے والوں کیلئے شرائط و ضوابط:👇🏻

1) اِرادہ: اِس سیاسی محاذ میں خلوصِ نیت، خدمتِ خلق کے جذبے اور بغیر کسی عہدوں اور پیسوں کی لالچ کے جُڑنے اور کام کرنے والوں کو خوش آمدید۔ شہر میں جِن افراد کے دلوں میں یہ خیال ہو کہ چوتھے محاذ کے پلیٹ فارم سے سیاست میں داخل ہوکر پیسے کمانا ہے، ٹھیکیداروں سے کمیشن خوری کرنی ہے یا عہدے حاصل کرنا ہے، تو ایسے لوگ اس محاذ سے ہرگز نہ جُڑیں اور ایسی سوچ رکھنے والے لوگوں کو بھی دُور رہنے کی تلقین کریں۔ شہر کی تعمیر و ترقی اور خوشگوار مُستقبل کیلئے خلوصِ نیت، خدمتِ خلق کے جذبے اور بِنا کسی لالچ عوام الناس کی فلاح کیلئے کام کرنے والوں کو ہی ساتھ لیکر کام کیا جائے گا۔
2) شہر بھر میں "محلہ ڈیولپمنٹ کمیٹی" اور "وارڈ ڈیولپمنٹ کمیٹی" کی تشکیل: مالیگاؤں شہر کے تمام محلوں کے مسائل، انکے حل اور ڈیولپمنٹ کے کاموں کو لیکر فِکرمند رہنے والے افراد اور ذمے داران کی ہر محلے میں 21 رکنی کمیٹی "محلہ ڈیولپمنٹ کمیٹی" تشکیل دی جاۓ گی۔ اسکے علاوہ شہر کے ہر وارڈ میں محلہ ڈیولپمنٹ کمیٹیوں کو مِلاکر "وارڈ ڈیولپمنٹ کمیٹی" کی تشکیل دی جائیگی۔ یہ کمیٹیاں اپنے اپنے محلوں اور وارڈ کی عوام کے رابطے میں رہتے ہوئے تمام مسائل، ان مسائل کےحل، نۓ تعمیری کاموں کی جانب اقدامات اور دیگر ترقیاتی کاموں کیلئے ہمیشہ کوششیں جاری رکھیں گی اور تمام ذمے داران متعلقہ ڈپارٹمنٹس اور محاذ کی ہیڈ آفس سے رابطہ بناۓ رکھیں گے۔ دسمبر کے مہینے تک عوام اپنے اپنے محلوں میں چوتھے محاذ کی "محلہ ڈیولپمنٹ کمیٹی" بناکر محلے کے موجودہ مسائل اور ضروری کاموں کی لسٹ بنانے کا کام شروع کر دیں۔
3) امیدواروں کے اخراجات:
4) چوتھے محاذ کے کِسی بھی امیدوار کو اپنے الیکشن میں 1 لاکھ روپے‌ (ایک لاکھ روپے) سے زائد خرچ کرنے کی ہرگز اجازت نہیں ہوگی۔ اِن اخراجات میں الیکشن کیلئے ڈپازٹ کی رقم، کارنر میٹنگز کے اخراجات، گھر گھر جاکر ملاقات کرنا، پورے وارڈ میں مینیفیسٹو کے پمفلیٹس کی تقسیم کرنا، دیگر سرکاری درباری کرسپونڈنس کرنا، انٹرنیٹ کنکشن سے سوشل میڈیا کیلئے چند افراد پر مشتمل ٹیم تیار کرنا، گراؤنڈ لیول پر محنت کرنا اور دیگر ضروری کاموں کے اخراجات شامل ہونگے۔
4) عوام کیلئے چاۓ، ناشتے اور کھانے کا انتظام: چوتھے محاذ کے امیدوار نہ کسی کی الیکشنی چاۓ پئیں گے اور نہ کسی کو پلائیں گے۔ نہ کسی کی الیکشنی دعوت کھائیں گے نہ کسی کو کھلائیں گے۔ الیکشن کے ایّام میں چوتھے محاذ کا کوئی بھی امیدوار لوگوں کو لُبھانے کیلئے لاکھوں روپوں کی چاۓ، ناشتہ اور پلاؤ بریانی وغیرہ کا نظم ہرگز نہیں کریگا۔ درجنوں پائلی کھانا، ناشتہ، چاۓ، ٹھنڈا اور پیسوں کے عوض سیکڑوں بھاڑے کے ورکرز اکھٹا کرنے میں لاکھوں روپے فضول خرچ کر دئیے جاتے ہیں جس کے نتیجے میں اسطرح سے منتخب ہونے والے امیدوار پہلی فرصت میں بیت المال سے کروڑوں کی چوری کرنے اور اپنا لگایا ہوا مال سود سمیت واپس لینے میں جُٹ جاتے ہیں۔ اِنہیں وجوہات سے آج ہمارا شہر کھنڈر میں تبدیل ہو چکا۔ چوتھے محاذ کے امیدوار، ورکرز اور حمایتی ہارنا پسند کریں گے لیکن اپنے ان بنیادی اصولوں کو ہرگز نہیں توڑیں گے انشاءاللہ۔
5) بڑے بڑے جلسے جلوس، پٹاخے بازی، ڈی جے، ہلڑ بازی اور فضول خرچی: محاذ کے کسی بھی امیدوار، ورکرز اور حمایتیوں کو لاکھوں روپے خرچ کرتے ہوئے بڑے بڑے جلسے، جلوس اور فضول ریلیاں نکال کر ہلڑ بازی کرنے اور عوام کو تکلیف دینے کی ہرگز اجازت نہیں ہوگی۔‌ اِسی کے ساتھ پٹاخے بازی، گُلال کھیلنے اور ڈی جے اور گانے بجانے پر لاکھوں روپے خرچ کرنے کی اجازت ہرگز نہیں ہوگی۔ چوتھے محاذ کے پلیٹ فارم سے صرف اور صرف شہر کے موجودہ مسائل، اِن مسائل کے حل اور ترقیاتی کاموں کے ایجنڈا پر تمام وارڈز اور محلوں میں چھوٹی چھوٹی میٹنگس لی جائیں گی اور ڈور ٹُو ڈور ملاقات کرکے عوام سے رابطہ قائم کیا جائے گا۔ اسکے علاوہ بڑی میٹنگز یا گیدرِنگس کیلئے کور ورکنگ کمیٹی اور پارلیمنٹری بورڈ کے مشورے سے لاحہ عمل تیار کیا جائے گا۔
6) ورکرز، ورکنگ ٹیم اور عوام:
7) چوتھے محاذ کے امیدواروں، ورکرز اور حمایتیوں کو پیسے لیکر کام کرنے والوں کو اپنے ساتھ شامل کرنے کی ہرگز اجازت نہیں ہوگی۔ صِرف خلوصِ نیت، خدمتِ خلق کے جذبے اور بِنا کسی عہدوں اور پیسوں کی لالچ کے شہر کی تعمیر و ترقی اور خوشگوار مستقبل کیلئے مِل جُل کر کام کرنے والوں کو ہی ساتھ لیا جائیگا۔ (عہدوں اور پیسوں کے عوض کام کرنے والوں اور نوٹ کے بدلے ووٹ دینے والوں کو دُور سے سلام۔)
7) اتحاد واتفاق: چوتھے محاذ کے کسی بھی امیدوار، ورکز اور حمایتیوں کو اپنے حزب مخالف میں سے کسی بھی فرد کی ذاتیات پر بولنے، بدکلامی اور بداخلاقی کرنے، فرقہ پرستی، برادری واد یا انتشار پھیلانے یا کسی بھی قسم کے بھڑکاؤ بھاشن دینے کی ہرگز اجازت نہیں ہوگی۔ صرف مالیگاؤں شہر کی تعمیر و ترقی، خوشگوار مستقبل اور عوام الناس کی فلاح اور اتحاد واتفاق قائم کرنے کیلئے ایماندارانہ محنت اور کوششیں کی جائیں گی۔
درج بالا تمام شرائط و ضوابط پر عمل کرنا لازمی ہوگا۔

الحمدللہ شہر بھر سے ہزاروں کی تعداد میں لوگ چوتھے محاذ سے جُڑنے کے خواہشمند ۔۔۔!

عنقریب مشاورتی میٹنگ کی تاریخ، تشکیل اور شہر بھر میں کینڈیڈیٹ سیلیکشن کیلئے شرائط و ضوابط کو عوام الناس کے سامنے پیش کیا جائے گا، انشاءاللہ۔۔۔!

اپیل۔۔۔! 👇🏻

مالیگاؤں شہر میں انصاف، ایمانداری اور خلوص پر مبنی ایک نۓ سیاسی محاذ کی اشد ضرورت۔۔۔!

عوامی اتحاد اور متعدد پارٹیوں کے اتحاد سے شہر میں "چوتھے محاذ کی بنیاد ناگزیر۔۔۔! "Fourth front"

🌳 ابھی نہیں۔۔ تو کبھی نہیں۔۔۔!🌳

مالیگاؤں شہر کے خوشگوار مستقبل اور اصل تعمیر و ترقی کیلئے اب شہر میں ایک نۓ سیاسی محاذ کی اشد ضرورت۔۔۔!

شہر عزیز کی اصل تعمیر و ترقی اور خوشحالی کیلئے تعلیم یافتہ نوجوانوں، ڈاکٹرز، سٹیچرز، انجینئرز، وکلاء، بنکر، تاجر، اِسکِلڈ اور ان اِسکلِڈ ورکرس، شہر کی خواتین، سماجی فلاحی تنظیمیں اور چنندہ پارٹیوں پر مشتمل ایک نئے سیاسی پلیٹ فارم کی اشد ضرورت ہے۔۔۔!* *انشاءاللہ ہمارا شہر بھی اب دیگر ترقی یافتہ شہروں کی صف میں ضرور کھڑا ہوگا۔

کب تک شہر کی عوام سالوں سال صرف شکایات کرنے تک محدود رہیگی؟ اور بے حِس لیڈران مظلوم عوام کی بے بسی کا مذاق اڑاتے ہوئے، انہیں طرح طرح کی الجھنوں میں ڈالتے ہوئے آپس میں گٹھ جوڑ بناکر بیت المال سے ہزاروں کروڑ کی  لوٹ مار کرتے رہینگے اور شہر کو مزید برباد کرتے رہینگے؟

مالیگاؤں شہر کی موجودہ صورتحال اور عوامی تکالیف و پریشانیوں کو دیکھ کر آج شہریان میں زبردست بے چینی محسوس کی جا رہی ہے۔ تعمیر و ترقی کے جھوٹے وعدے، ایک دوسرے کی بدعنوانیوں کے خلاف لڑائی کی نوٹنکی، آپسی رنجِشوں کا ڈھونگ اور فرقہ پرست طاقتوں کا چورن بیچ کر مالیگاؤں شہر کی عوام کو دہائیوں سے صرف بیوقوف بنایا جارہا ہے۔

ایک لمبے عرصے سے چل رہی گھٹیا سیاست، لیڈران کی چالبازیو اور بیت المال سے ہزاروں کروڑ کی لوٹ مار کو دیکھ کر عوام اب عاجز اور پریشان ہو چُکی ہے۔ آج ہر شہری اور تنظیمیں مقامی سیاست میں بڑی اور مثبت تبدیلی کے منتظر ہیں۔

شہر میں اکثریت کی یہی خواہش ہے کہ شہر سے خود غرض سیاست، خاندانی سیاست، بدعنوانیوں کی سیاست اور سیاسی نوٹنکیوں کا سلسلہ ختم کیا جائے اور شہر بھر سے سنجیدہ، تعلیم یافتہ، تعمیر و ترقی کی سوچ رکھنے والے اشخاص، تنظیموں، اداروں اور سیاست میں مُلکی، ریاستی و شہری سطح پر شفافیت سے کام کرنے والی چنندہ پارٹیوں پر مشتمل ایک نئے محاذ کی بنیاد رکھی جائے۔

بڑی بڑی پارٹیوں کے اسٹیج سے بڑے بڑے اور جھوٹے وعدے کرنے والے لیڈران نے آج تک عوام کو صرف بیوقوف بنایا اور بیت المال کو دونوں ہاتھوں سے لوٹتے رہے اور شہر کو تباہی کے دہانے پر لاکر چھوڑ دیا۔ تعمیر و ترقی کے جھوٹے وعدے اور ایک دوسرے پر بدعنوانیوں کے الزامات لگانے کا ڈھونگ کرنے والے لیڈران آج خُود سیکڑوں کروڑ کی نامی اور بینامی جائیدادوں کے مالک بنے بیٹھے ہیں، اور دوسری طرف مظلوم عوام جانوروں کی طرح زندگی گذارنے پر مجبور ہو چکی ہے۔

آج مالیگاؤں شہر کی عوام، چاہے وہ امیر ہوں، غریب ہوں یا مِڈل کلاس فیملی سے ہوں تمام ہی لوگ ہر طرح کی بنیادی سہولیات سے محروم اور پریشان ہیں۔ عوام کو شہر کے مشرقی حصّے میں اچھی کوالٹی کی معیاری سڑکیں میسّر نہیں، قوم کے بچّوں کو کھیلنے کودنے کیلئے گارڈن اور پلے گراؤنڈ میسّر نہیں، لاکھوں کی آبادی کو پینے کیلئے صاف پانی میسّر نہیں، گندے پانی کی نکاسی کا کہیں کوئی نظم نہیں، شہر کے ہر گھر میں مچّھر مکھیوں کی بھرمار، اِن تمام وجوہات سے ہونے والی مہلک بیماریوں سے شہر کی عوام بے حال ہے تو غریب عوام کے پاس علاج کیلئے پیسے تک نہیں، شہر کے تمام سرکاری اسپتال بدعنوانیوں کا شکار ہو کر سہولیات سے محروم، بنیادی سہولیات یا بیسِک اِنفراسٹکچر سے محروم یہ شہر اب اگر واقعی تعمیر و ترقی اور خوشحالی چاہتا ہے اور موجودہ غیر معیاری سیاست اور بدعنوانیوں کا خاتمہ کرنا چاہتا ہے تو کم از کم اپنے بچوں کے خوشگوار مستقبل کی خاطر ہر شہری کو بیباکی سے آگے آکر اک انقلابی تحریک کا حصّہ بنتے ہوئے ہمیں نۓ مضبوط سیاسی محاذ کی بنیاد رکھنی ہوگی۔

ہمارے شہر کی اصل تعمیر و ترقی کیلئے اب ضرورت آن پڑی ہے کہ شہر بھر سے پڑھے لکھے نوجوان، ڈاکٹرس، ٹیچرز، انجینئرس، وکلاء، بُنکر، تاجر، سوشل ورکرز، صحافی، اِسکِلڈ ورکرز، خواتین، دینی و سماجی تنظیمیں اور شہر میں متعارف چنندہ نئ سیاسی پارٹیاں ایک جُٹ ہوکر ایک نۓ سیاسی محاذ یعنی نۓ محاذ "Fourth front" کی بنیاد رکھیں اور شہر میں دہائیوں سے چل رہی سیاسی نوٹنکی اور بدعنوانیوں کا خاتمہ کرنے کی بھرپور کوشش کریں، انشاءاللہ کامیابی ضرور ملیگی۔

اسلۓ مالیگاؤں شہر کی خوشحالی اور تعمیر وترقی کیلئے مفاد عامہ میں درج ذیل پارٹیوں، تنظیموں، اداروں، کلبوں، سوشل گروپس، ڈیجیٹل میڈیا اینڈ یو ٹیوب چینلز، نیوز پورٹلس اخبارات اور شہر کی عوام سے ظلم اور ناانصافی کے خلاف ڈٹ کر مقابلہ کرنے کیلئے مضبوط سیاسی محاذ بنانے کی دعوت و مخلصانہ اپیل کی جاتی ہے، مفاد عامہ میں اسے قبول کرنا یا نہ کرنا ہر ایک کے اپنے دائرۂ اختیار میں ہے۔ 👇🏻

-اراکین عام آدمی پارٹی
--اراکین انڈین یونین مسلم لیگ
- اراکین مالیگاؤں ڈیولپمنٹ فرنٹ
- -اراکین مالیگاؤں عوامی پارٹی
-موجودہ تمام پارٹیوں کے اراکین جو شہر میں غیر معیاری سیاست سے عاجز آچکے ہیں۔
-- اراکین ونچت اگھاڑی
- اراکین بہوجن سماج پارٹی
- -اراکین پرائیورٹی اینڈ سولوشن گروپ۔
-اراکین آمہی مالیگاؤنکر ودھایک سنگھرش سمیتی۔
--اراکین پارلیمنٹری بورڈ، (شہر میں تعمیر و ترقی کے مِشن کو لیکر 2007 میں بننے والے پارلیمنٹری بورڈ کے اراکین۔)
- اراکین مالیگاؤں کلب
- - اراکین مالیگاؤں الکٹرانک میڈیا
- اراکین محفوظ کالونی گروپ
- - اراکین اتی کرمن مکت مالیگاؤں
- اراکین مالیگاؤں بلڈ ڈونرس گروپ
- - اراکین امید فاؤنڈیشن
-اراکین دیانہ گروپ
--اراکین مالدہ گروپ
-اراکین دریگاؤں گروپ
--اراکین ‌مالیگاؤں سینٹرل گروپ
- اراکین ایکتا فاؤنڈیشن
- - اراکین حفاظت گروپ
- اراکین مولانا کمپاؤنڈ گروپ
- - اراکین حمزہ بلڈ ڈونرز گروپ
- اراکین عصیم فاؤنڈیشن 
- - اراکین مانَو ادھیکار
- اراکین ارباب ذوق گروپ
- -اراکین رمضانپورہ گروپ
-اراکین ہمدرد گروپ
--اراکین خدمت خلق گروپ
-اراکین مالیگاؤں وکاس کمیٹی
--اراکین آل مالیگاؤں آٹوکنسلٹنٹس گروپ
-اراکین آل مالیگاؤں رئیل اسٹیٹ کنسلٹنٹس گروپ
--اراکین گلزار نیٹ ورک گروپ
اور شہر کے تمام سوشل, سماجی فلاحی گروپس۔

-مالیگاؤں شہر کے تمام ٹیچرز، پروفیسرز اور تعلیمی اداروں کے ذمے داران۔
--مالیگاؤں شہر کے تمام ڈاکٹرز, میڈیکل اینڈ فارمیسِسٹ، حکیم اور اُمگا کے اراکین۔
-مالیگاؤں شہر کے تمام آرکٹیکٹ اور انجینئرز۔
--مالیگاؤں شہر کے تمام وکلاء، انکم ٹیکس وکلاء۔
-مالیگاؤں شہر کے تمام تاجر اور بُنکر حضرات۔ 
--مالیگاؤں شہر کے تمام مزدور اور اِسکِلڈ ورکرز اور یونیَنز
-مالیگاؤں شہر کے تمام اسٹوڈنٹس اور گریجویٹس۔
--مالیگاؤں شہر کی تمام این جی اوز اور دیگر فلاحی و سماجی تنظیمیں۔
-مالیگاؤں شہر کے تمام سوشل ورکرز اور تنظیمیں۔
--مالیگاؤں شہر کے تمام نوجوان و بزرگان۔ اور مالیگاؤں شہر کی تمام خواتین سے اس انقلابی تحریکِ انصاف چَوتھے محاذ کو ہر طرح سے مضبوط کرنے، تعاون کرنے، سپورٹ کرنے اور تقویت پہونچانے کی مخلصانہ اپیل کی جاتی ہے۔

درج ذیل چینلز اور نیوز پورٹلس سے بھی شہر کی تعمیر و ترقی، خوشحالی اور مظلومین کو انصاف دلانے کیلئے مفاد عامہ میں تعاون کرنے کی مخلصانہ اپیل کی جاتی ہے۔

-مانَو سماچار
--اتحاد ٹائمز
-داستان شہر ملٹی میڈیا
--فرنود رومی نیوز پورٹل اینڈ یوٹیوب چینل
-محاذ نیوز
--سچ کا سامنا
-نیو مالیگاؤں
--نیوز مالیگاؤں
-رسائٹ ٹوڈے
--سچ بات
-سیف نیوز
--مالیگاؤں فرنٹ
-ہم بھارت نیوز
--تحریک نیوز نیٹورک
-مالیگاؤں نیوز
--ایم ایچ 41 نیوز
-مالیگاؤں ہَیش ٹیگ وغیرہ سے مفاد عامہ میں اپیل کی جاتی ہے، اسے قبول کرنا یا نہ کرنا ہر ایک کے دائرۂ اختیار میں ہے۔ 
ظلم اور ناانصافی کے خلاف ایک ہوجائیں متحد ہوجائیں انشاءاللہ جیت عوام کی ہوگی۔

اپیل کنندہ:
کلیم یُوسف عبداللہ اینڈ ٹیم
گرین مالیگاؤں ڈرائیو

🌳 🌳 🌳 🌳 🌳 🌳 🌳

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے